Home / Uncategorized / اقتصادی راہداری کے مغربی روٹ پر کام مکمل کر کے صوبوں کے تحفظات دور کئے جائیں گے :نواز شریف
اقتصادی راہداری کے مغربی روٹ پر کام مکمل کر کے صوبوں کے تحفظات دور کئے جائیں گے :نواز شریف

اقتصادی راہداری کے مغربی روٹ پر کام مکمل کر کے صوبوں کے تحفظات دور کئے جائیں گے :نواز شریف

اسلام آباد(آن لائن)وزیر اعظم میاں نوازشریف نے کہا کہ اقتصا دی راہداری کے مغربی روٹ پر کام تیز رفتاری سے مکمل کر کے تمام صوبوں کے تحفظات دور کئے جائیں گے، ترقیاتی ایجنڈے سے ملک کی تقدیر بدلیں گے اورپاکستان ایشیا کا ٹائیگر بنے گا ۔ ترقیاتی منصوبوں کی تکمیل سے نوجوانوں کے لئے روزگار کے مواقع پیدا ہونگے ۔ انڈس ہائی وے کے ادھورے سیکشن فوری مکمل کئے جائیں۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے گزشتہ روز وزارت منصوبہ بندی و ترقیات کے دورہ کے موقع پر کیا ۔ وفاقی وزیر اسحق ڈار بھی وزیراعظم کے ہمراہ تھے، وزیراعظم نے وزارت منصوبہ بندی میں تین گھنٹے سے زائد وقت گزارا، وفاقی وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال نے وزارت کے سینئیر افسران کے ہمراہ وزیراعظم کا استقبال کیا، احسن اقبال نے وزیراعظم کو وزارت منصوبہ بندی سے متعلق اموراور پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت جاری کا م پر تفصیلی بریفنگ دی، وزیراعظم کو پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت جاری منصوبوں پر پیش رفت سے آگاہ کیا گیا، وزیراعظم نے پاک چین اقتصادی راہداری میں شامل وزارت منصوبہ بندی اور دیگر وزارتوں کے افسران کی کارکردگی کو سراہا، وزیراعظم نے وزارت منصوبہ بندی میں ایک اجلاس کی صدارت بھی کی، وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال کی جانب سے رواں سال کے ترقیاتی بجٹ اور ترقیاتی منصوبوں اور ا اہداف کے حصول کا جائزہ پیش کیا، وزیر اعظم کو منصوبوں کی بروقت تکمیل اور منصوبوں میں شفافیت کے حوالے سے اقدامات سے آگاہ کیا، وزیراعظم نے ترقیاتی بجٹ اور منصوبوں کے بر وقت تکمیل کے لئے اصلاحات کی منظوری دی، وزیر اعظم نے کہا کہ ترقیاتی ایجنڈے سے ملک کی تقدیر بدلیں گے۔ پاکستان ایشیا کا ٹائیگر بنے گا ۔ ترقیاتی منصوبوں کی تکمیل سے نوجوانوں کے لئے روزگار کے مواقع پیدا ہونگے ۔ وزیر اعظم نے حکا م کو ہدایت کی کہ انڈس ہا ئی وے کے ادھورے سیکشن فوری مکمل کئے جائیں ۔ مغربی روٹ پر کام تیز رفتاری سے مکمل کیا جائے ۔ توانا ئی کے منصوبوں کی بروقت تکمیل یقینی بنائی جائے ۔ 20 ارب روپے سے بڑے منصوبوں کے سربراہ کے لئے سپیشل سکیل بنایا جائے ۔ مارکیٹ سے بہترین ٹیلینٹ شفاف انداز میں بھرتی کیا جائے ۔ پراجیکٹس کی نگرانی کے نظام کو مزید موثر کیا جائے ۔ ایس ڈی جی 2030 اور وژن 2025 کے اہداف کے لئے وزارت منصوبہ بندی تمام وسائل بروئے کار لائے ۔ احسن اقبال نے وزیر اعظم سے منصوبہ بندی کمیشن کے ممبران کا تعارف کروایا

Comments are closed.

Scroll To Top