Home / Uncategorized / این اے 162: سپریم کورٹ نے تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی رائے حسن نواز کو نااہل قرار دیدیا
این اے 162: سپریم کورٹ نے تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی رائے حسن نواز کو نااہل قرار دیدیا

این اے 162: سپریم کورٹ نے تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی رائے حسن نواز کو نااہل قرار دیدیا

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کیلئے بری خبر سامنے آگئی ہے جس کے مطابق الیکشن ٹربیونل کے بعد اب سپریم کورٹ نے بھی حلقہ این اے 162ساہیوال سے پی ٹی آئی کے رکن قومی اسمبلی رائے حسن نواز کو نااہل قرار دیدیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کی سربراہی میں 3رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی اور فریقین کے دلائل سننے کے بعد عدالت نے الیکشن ٹربیونل کے فیصلے کو برقرار رکھتے ہوئے رائے حسن نواز کو نااہل قراردیکر حلقے میں دوبارہ انتحابات کرانے کا حکم سنا دیا 

ذرائع کا کہنا ہے کہ حکمران جماعت مسلم لیگ نواز کے امیدوار حاجی محمد ایوب نے الیکشن ٹربیونل میں درخواست دائر کی تھی جس میں الزام عائد کیا گیا تھا کہ رائے حسن نواز نے اپنے اثاثے چھپائے ہیں جس  پرالیکشن ٹربیونل ملتان نے انکی رکنیت معطل کر کے تاحیات الیکشن لڑنے پر پابندی عائد کی تھی اور 90 روز میں حلقے میں دوبارہ الیکشن کرانے کا حکم دیا تھا  تاہم بعد میں انہوں نے الیکشن ٹربیونل کے فیصلے کیخلاف سپریم کورٹ میں اپیل کر دی جسے آج خارج کردیا گیا ہے۔

 ذرائع نےبتایا کہ پی ٹی آئی امیدوار رائے حسن نواز 87 کروڑ اثاثے، 22 کنال کمرشل پراپرٹی، سی این جی پمپس، پیٹرول پمپس، جی ٹی روڈ کے آس پاس 22 اسٹورز کے ساتھ ساتھ 36 کنال رقبے پر تعمیر رائے اقبال ٹاو¿ن ہاو¿سنگ اسکیم کے مالک ہیں۔

ذرائع کے مطابق رائے حسن نواز کا ٹیلی فون کا بل 4 لاکھ ہے جو انھوں نے 2006 سے ادا نہیں کیا جبکہ ان کے نام پر ایک کرولا گاڑی ہے۔

ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ رائے حسن نواز جب مرتضیٰ حسین ٹیکسٹائل کے مینیجنگ ڈائریکٹر (ایم ڈی) تھے تو انھوں نے اپنے ملازم بلاول حسین اور بھابھی کےنام پر قرضہ حاصل کیا، تاہم ان کے ملازم اور بھابھی نے اس بات کی تردید کردی ہے کہ انھوں نے قرض کے حصول کے لیے اپلائی نہیں کیا تھا۔

Comments are closed.

Scroll To Top