Home / Uncategorized / بھارت کو نیو کلیئر سپلائرزگروپ میں شامل ہونے کیلئے ’’ لوہے کے چنے ‘‘ چبانا , پاکستان و چین کیساتھ تعلقات بہتر کرنا ہونگے : نیو یارک ٹائمز
بھارت کو نیو کلیئر سپلائرزگروپ میں شامل ہونے کیلئے ’’ لوہے کے چنے ‘‘ چبانا , پاکستان و چین کیساتھ تعلقات بہتر کرنا ہونگے : نیو یارک ٹائمز

بھارت کو نیو کلیئر سپلائرزگروپ میں شامل ہونے کیلئے ’’ لوہے کے چنے ‘‘ چبانا , پاکستان و چین کیساتھ تعلقات بہتر کرنا ہونگے : نیو یارک ٹائمز

 واشنگٹن( اے این این ) امریکی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ بھارت کو نیوکلیئر سپلائرز گروپ کا رکن بننے کیلئے ’’لوہے کے چنے‘‘ چبانا ہونگے،پاکستان وچین کے ساتھ مذاکرات بحال اورتعلقات بہتر کرنا ہونگے،بھارت کواس بات کو بھی یقینی بنانا ہوگا کہ وہ سول نیوکلیئر ٹیکنالوجی کو فوجی مقاصد کیلئے استعمال نہیں کرے گا ۔

امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے اپنی رپورٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ بھارت کو نیوکلیئر سپلائرز گروپ کا رکن بننے کیلئے پاکستان اور چین کے ساتھ مذاکرات بحال کرنا ہونگے اور تعلقات کو بہتر کرنا ہوگا ۔ رپورٹ کے مطابق امریکہ نے بھارت پر واضح کیا ہے کہ اسے این ایس جی کی رکنیت کیلئے ادارے کے معیار پر پورا اترنا ہوگا اور ایٹمی عدم پھیلاؤ سے متعلق موثر اقدامات اٹھانا ہونگے ۔ این ایس جی کی رکنیت کے حوالے سے بھارتی درخواست پر اس ماہ کے آخر میں غور ہونا ہے ۔ اخبار کے مطابق اس اجلاس سے قبل اوبامہ انتظامیہ بھارت کو رکنیت دلانے کیلئے کوششوں میں مصروف ہے تاہم بھارت پر یہ بھی واضح کیا گیا ہے کہ اسے این ایس جی کی رکنیت کیلئے کچھ اقدامات اٹھانا ہونگے ۔ رواں ہفتے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کی وائٹ ہاؤس میں امریکی صدر باراک اوبامہ سے ملاقات بھی ہوگی ۔

اخبار نے لکھا ہے کہ بھارت کو این ایس جی کی رکنیت ملنے کے بعد پاکستان بھی اس کا مطالبہ کرے گا جس نے پہلے ہی رکنیت کیلئے درخواست دے رکھی ہے ، این ایس جی کی رکنیت کیلئے فیصلہ متفقہ طور پر ہوناہے ۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ چین بھارت کی مخالفت کرے گا جس کے پاکستان کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں ۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اگر بھارت کو اس گروپ کی رکنیت حاصل کرنی ہے تو اسے نیوکلیئر گروپ کے معیارات پر پورا اترنا ہوگا ، پاکستان اور چین کے ساتھ مذاکرات کے ذریعے تعلقات کو بحال کرنا ہوگا ۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ امریکہ چین کے مقابلے میں کافی عرصے سے بھارت کو سپورٹ فراہم کررہا ہے ۔2008 ء میں امریکہ نے بھارت کے ساتھ وعدہ کیا تھا کہ اسے نیوکلیئر ٹیکنالوجی فراہم کی جائے گی ۔ بھارت کو یہ بات بھی یقینی بنانا ہوگی کہ وہ سول نیوکلیئر ٹیکنالوجی کو فوجی مقاصد کیلئے استعمال نہیں کرے گا ۔

Comments are closed.

Scroll To Top