Home / Feature / حکومت بھی پھرتیاں دکھانے لگی، کرپٹ وزراءکی چھان بین پر اتفاق
حکومت بھی پھرتیاں دکھانے لگی، کرپٹ وزراءکی چھان بین پر اتفاق

حکومت بھی پھرتیاں دکھانے لگی، کرپٹ وزراءکی چھان بین پر اتفاق

5.

اسلام آباد (ویب ڈیسک) آرمی چیف جنرل راحیل شریف کے ایکشن کے بعد وفاقی حکومت بھی حرکت میں آگئی ہے اور جن وفاقی صوبائی وزراءکیخلاف مبینہ طورپر بدعنوانی کی شکایت ہیں ان کی چھان بین شروع کر دی گئی ہے اور تین خفیہ اداروں سے ان وزراءسے متعلق جامع رپورٹ بھی ایک ہفتے میں مانگ لی گئی ہے ۔

مقامی اخبار کے مطابق وزیراعظم نواز شریف اور وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے درمیان ہونے والی ملاقات میں یہ فیصلہ ہوا ہے کہ ان وفاقی وزراء، صوبائی وزراءاور پارلیمانی سیکرٹری و مشیروں کے خلاف تیزی سے کارروائی مکمل کر کے ان کے خلاف ایکشن لیا جائے جن پر مبینہ طورپر بدعنوانی کے الزامات ہیں یا ان کے خلاف مختلف حلقوں سے شکایات موصول ہوئی ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم اپنے ایسے وزراء کو بھی قربان کرسکتے ہیں جو کرپشن میں ملوث رہے ہیں۔

مسلم لیگ ن کے دو صوبائی وزراءاور ایک رکن قومی اسمبلی بھی ان تحقیقات اور چھان بین کی زد میں آئے ہیں جبکہ وفاقی وزراءکی تعداد بھی تین بتائی گئی ہے جن پر مختلف نوعیت کے الزامات ہیں ۔ وزیراعظم نے مسلم لیگ ن وفاق اور پنجاب کے وزراء، مشیر اور پارلیمانی سیکرٹریوں کی کارکردگی رپورٹ بھی طلب کی ہے جبکہ چھان بین کا کام آئی ایس آئی ، آئی بی اور سپیشل برانچ کے حوالے کیا گیا ہے ان کی جانب سے دی جانے والی رپورٹس کی روشنی میں رواں ماہ کے آخر میں اجلاس ہو گا جس میں وفاقی حکومت اپنی پارٹی کے بد عنوان عناصر کیخلاف ایکشن کے حوالے سے اہم فیصلہ کر سکتی ہے۔

Comments are closed.

Scroll To Top