Home / Uncategorized / مجھے ہرانے کیلئے نواز شریف نے پانچ اور’’ را‘نے دس کروڑخرچ کئے ، بیرسٹرسلطان
مجھے ہرانے کیلئے نواز شریف نے پانچ اور’’ را‘نے دس کروڑخرچ کئے ، بیرسٹرسلطان

مجھے ہرانے کیلئے نواز شریف نے پانچ اور’’ را‘نے دس کروڑخرچ کئے ، بیرسٹرسلطان

اسلام آباد( اے این این )آزادکشمیرکے سابق وزیر اعظم وپی ٹی آئی کے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ نریندر مودی کی خوشنودی اور مجھے ہرانے کیلئے نواز شریف نے پانچ اور’’ راء‘‘ کے دس کروڑخرچ کئے گئے،انتخابی نتائج کو مسترد کرتے ہیں ،نوازشریف نے ٹیکنیکل انتخابی دھاندلی کرکے تحریک آزادی کو دھچکا پہنچایا،پیپلز پارٹی اور مسلم کانفرنس سے صلاح مشورے کے بعد آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا،مجھے اپنی نشست نہ جیتنے کا کوئی ملال نہیں کیونکہ میں دھاندلی کی پیداوار اورکٹھ پتلی اسمبلی میں بیٹھنا بھی پسند نہیں کرتا،بدنیتی اور دھاندلی سے بنائی گئی اسمبلی ز یادہ عرصہ قائم نہیں رہ سکے گی۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے یہاں اسلام آباد میں ملکی، انٹرنیشنل، پرنٹ و الیکٹرانک میڈیا کی پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ یہ کوئی انوکھی بات نہیں بلکہ گذشتہ سترسال سے آزاد کشمیر میں یہ ہوتا رہا ہے کہ جو پارٹی پاکستان میں اقتد ار میں ہوتی ہے اسکی مرضی سے آزاد کشمیر میں حکومت بنتی ہے۔مسلم لیگ ن نے انتخابات سے پہلے دو ارب روپے کی اسکیموں سے اور پھر مسلم لیگ ن کے ہر امیدوار کو پانچ پانچ کروڑ ووٹرز کو خریدنے کے لئے دیا گیا۔تاکہ ہر امیدوارآزاد کشمیر کے لوگوں کو بھکاری سمجھ کر خرید سکے۔میں نے چونکہ مودی کے خلاف امریکہ ، برطانیہ، برسلز اور دیگر جگہوں پر ملین مارچز کیے تھے اسلئے میرے خلاف نواز شریف کے پانچ کروڑ اور راء کے دس کروڑخرچ کیئے گئے تاکہ میں مودی کے خلاف اپنی جدوجہد جاری نہ رکھ سکوں ۔ لیکن عوام اس دھاندلی کو جان چکے ہیں۔ بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے 21جولائی کو آزاد کشمیر میں ہونے والے انتخابات کے نتائج کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیراعظم نواز شریف نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو خوش کرنے کیلئے مجھے اور تحریک انصاف کو خاص طور پر نشانہ بنایا اور مجھے ہرانے کیلئے ٹیکنیکل اور سائنٹیفک دھاندلی کی گئی نواز شریف کرپشن کا بادشاہ ہے کرپشن سے لوٹی ہوئی ملک کی دولت کو آزاد کشمیر کے الیکشن میں ووٹ خریدنے کیلئے استعمال کیا گیا میرے حلقے میں آخری رات میں کروڑوں روپے تقسیم کئے گئے۔ ن لیگ نے دھاندلی کیلئے آزاد کشمیر میں 2ارب روپے تقسیم کئے اور مزید پانچ پانچ کروڑ روپے امیدواروں کو ووٹ خریدنے کیلئے دیئے گئے آزاد کشمیر کے انتخابات میں دھاندلی کے ذریعے قائم ہونے والی حکومت چھ ماہ سے زائد برقرار نہیں رہ سکتی چھ ماہ بعد آزاد کشمیر میں دوبارہ انتخابات ہوں گے۔ نواز شریف اور اس کے حواریوں کی طرف سے آزاد کشمیر کا الیکشن لوٹنے سے کنٹرول لائن کے اس پار غلط پیغام ہے مقبوضہ کشمیر میں دھاندلی کے الیکشن ہوتے تھے اب آزاد کشمیر میں بھی دھاندلی کے الیکشن ہو رہے ہیں۔عمران خان کی قیادت پر پورا اعتماد ہے تحریک انصاف آزاد کشمیر نے پہلے الیکشن میں ڈھائی لاکھ سے زائد ووٹ حاصل کر کے ریکارڈ قائم کیا ہے۔ پیپلزپارٹی نے بھی انتخابی نتائج مسترد کر دیئے ہیں تحریک انصاف نے بھی مسترد کر دیئے ہیں اور سردار عتیق کا موقف بھی ہمارے مطابق ہے آئندہ کا لائحہ عمل دیگر جماعتوں کے ساتھ مشاورت کے بعد طے کروں گا۔ بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا کہ یہ اسمبلی دھاندلی کی پیداوار ہے میں مطمئن ہوں کہ اس جعلی اسمبلی کا حصہ نہیں ہوں ن لیگ نے اس الیکشن میں سائیٹیفک اور ٹیکنیکل دھاندلی کی ہے ہر حلقے میں کروڑوں روپے کے ذریعے ووٹ خریدے گئے میرے مقابلے میں ایسے امیدوار کو جتوایا گیا جو ایک تاجر ہے اور اس کا کوئی سیاسی بیک گراؤنڈ ہی نہیں مجھے صرف اس لئے ٹارگٹ کیا گیا کہ میں نے ہمیشہ نریندر مودی کو للکارا جو میاں نواز شریف کا دوست ہے۔ نواز شریف بھارت میں اپنی سٹیل ملیں لگانا چاہتے ہیں اس لئے نریندر مودی کو خوش کر رہے ہیں تحریک انصاف کا آزاد کشمیر میں یہ پہلا الیکشن تھا اس کے باوجود ڈھائی لاکھ سے زائد ووٹ لے کر ثابت کیا کہ عمران خان کے ویژن کو آزاد کشمیر میں پذیرائی حاصل ہے۔
سلطان محمود

Comments are closed.

Scroll To Top