Home / Uncategorized / نام نہاد سیکولر بھارت میں مسلمانوں پر یوگا ,نوکریوں کی پابندی کی خبر دینے پرصحافی گرفتار
نام نہاد سیکولر بھارت میں مسلمانوں پر یوگا ,نوکریوں کی پابندی کی خبر دینے پرصحافی گرفتار

نام نہاد سیکولر بھارت میں مسلمانوں پر یوگا ,نوکریوں کی پابندی کی خبر دینے پرصحافی گرفتار

13231185_1693388137582549_1874448076_n

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک)دنیا کے بڑے سیکولر ملک ہونے کے دعویدار بھارت میں صحافی کو مسلمانوں پر یوگا نوکریوں کی پابندی کی خبر رپورٹ کرنے پرگرفتارکر لیا گیا ہے ۔ اے آر وائے نیوز کے مطابق ایک بھارتی صحافی کو مسلمانوں سے متعلق رپورٹ شائع کرنے پر گرفتار کیا گیا ہے جس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ حکومت نے مسلمانوں کو امتیازی سلوک کانشانہ بنا تے ہوئے انہیں وزارت ِایوش (یوگا کے فروغ اور آیورویدک طریقہ علاج کی وزارت )‘ میں یوگا ٹرینرز کی نوکریاں دینے سے انکار کر دیا ۔

صحافی پوشپ شرما کو ’رائٹ ٹو انفارمیشن‘دستاویزات میں سے خبر گھڑنے کا مورد الزام ٹھہرایا گیا ہے تاہم صحافی نے ان الزامات کو یکسر مسترد کر دیا ہے ۔ شرماکی رپورٹ بھارتی مسلم کمیونٹی کے ایک اخبار ملی گزت میں رواں برس مارچ میں شائع ہوئی تھی ۔ رپورٹ میں حکومتی دستاویزات کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ گزشتہ برس ورلڈ یوگا ڈے کے موقع پر مسلمانوں کو بیرون ملک یوگا سکھانے کے لئے سفر کرنے پر پابندی تھی ۔

رپورٹ کے مطابق وزارت سے متعدد سوالات کے بعد جواب ملا کہ یوگا ٹیچرز کے لئے اپلائی کرنے والے 3841مسلمانوں میں سے کوئی بھی مسلمان بھرتی نہ کیا گیا ۔ یہ بھرتیاں اکتوبر 2015کو کی گئیں ۔

Comments are closed.

Scroll To Top