Home / Uncategorized / پہلی محبت کی خواہش تھی کہ جرنلزم چھوڑدوں لیکن پوری نہیں کی: حامد میر
پہلی محبت کی خواہش تھی کہ جرنلزم چھوڑدوں لیکن پوری نہیں کی: حامد میر

پہلی محبت کی خواہش تھی کہ جرنلزم چھوڑدوں لیکن پوری نہیں کی: حامد میر

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سینئر صحافی حامد میر نے انکشاف کیاہے کہ صحافت کی راہ میں کوئی چیز آڑے نہیں آنے دی ، پہلی محبت بھی صحافت پر قربان کردی ، خاتون نے فرمائش کی تھی کہ صحافت چھوڑ کر سی ایس ایس کرلیں تاکہ اس کے والدین بھی خوش ہوجائیں لیکن میں نے خداحافظ کردیاتھا۔
نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں میزبان کے یکے بعد دیگرے کئی سوالات کے جواب میں حامد میر کاکہناتھاکہ پہلی محبت کی عزت اور احترام کو برقراررکھنے کے لیے ضروری ہے کہ کوئی بھی اس کا نام نہ لے ، میں اس وقت بھی ایساہی تھا ، خطوط تک تو نوبت نہیں آئی تھی تاہم ایک لمباقصہ ہے اور مختصر یہ کہ میں جرنلزم کا سٹوڈنٹ تھا توان کی ایک خواہش تھی کہ میں صحافت چھوڑ دوںاور سی ایس ایس کر کے ’بابو‘ بن جاﺅںتو پھر وہ بھی خوش اور ان کے امی ابو بھی خوش ہوجائیں گے لیکن اس خواہش یا مطالبے پر اُنہوں نے ’گڈبائے ‘ کہہ دیاتھا، پہلی محبت صحافت ہی رہی۔
میزبان نے نتیجہ نکالا کہ پہلی محبت صحافت کی وجہ سے ناکام ہوگئی ، اصل میں عاشق ہوتاہی وہ ہے جس کی محبت ناکام ہوجائے جس پر حامد میر کاکہناتھاکہ شکر یہ ہے کہ محبت میں ناکامی کے بعد شاعر نہیں بنے ،صحافی بن گئے ۔

Comments are closed.

Scroll To Top