Home / Uncategorized / چمن کے علاقے بوغرہ سے افغان انٹیلی جنس کا حاضر سروس افسر گرفتار
چمن کے علاقے بوغرہ سے افغان انٹیلی جنس کا حاضر سروس افسر گرفتار

چمن کے علاقے بوغرہ سے افغان انٹیلی جنس کا حاضر سروس افسر گرفتار

چمن(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی ایجنسی را کے حاضر سروس افسر کی گرفتاری کے بعد چمن کے علاقے بوغرہ سے افغان انٹیلی جنس افسر کو گرفتار کرکے بھاری مقدار میں اسلحہ اور گولہ بارود برآمد کرلیا گیا ہے۔
ترجمان ایف سی کے مطابق افغان انٹیلی جنس ایجنسی خاد کا حاضر سروس افسر چمن کے علاقے بوغرہ سے گرفتار کیا گیا ہے جس کے قبضے سے ایک پسٹل اور دیگر اسلحہ برآمد ہوا تاہم ابتدائی تفتیش کے بعد جاسوس کی نشاندہی پر چمن کے نواحی علاقے میں ایک کمپاونڈ پر کارروائی کی گئی جہاں سے21 کلو بارودی مواد، 4 ایس ایم جی رائفلز، سیکڑوں گولیاں، سنیپر سکوپ، بم بنانے کے آلات، مختلف فورسز کے کارڈز اور فورسز کے زیر استعمال وائرلیس سیٹ برآمد ہوئے ہیں۔
ایف سی حکام کا کہنا ہے کہ یہ جاسوس پاک افغان بارڈر کے علاقوں میں بھارتی خفیہ ایجنسی را کے ساتھ مل کر کارروائیاں کرتا تھا ۔ چمن سے گرفتاری کے بعد اسے کوئٹہ منتقل کیا جارہا ہے جہاں اس سے مزید تفتیش کی جائے گی ۔

ایف سی نے جاسوس کی گرفتاری کے حوالے سے اپنی حکمت عملی وضع کرلی ہے اور اسی حکمت عملی کے تحت افغان جاسوس سے کی جانے والی تفتیش کو خفیہ رکھا جارہا ہے تاکہ اس کی نشاندہی کردہ مقامات سے اس کے سہولت کار اور ساتھی فرار نہ ہوسکیں اور ان کے گرد گھیرا تنگ کیا جاسکے۔
واضح رہے کہ مارچ کی 3 تاریخ کو سکیورٹی فورسز نے بلوچستان سے ہی بھارتی خفیہ ایجنسی را کا حاضر سروس افسر گرفتار کیا تھا جس کے انکشافات پر بہت سی کارروائیاں کی گئیں ۔

Comments are closed.

Scroll To Top