Home / Uncategorized / ڈیورنڈ لائن کو مستقل سرحد تسلیم کرتے ہیں: امریکہ
ڈیورنڈ لائن کو مستقل سرحد تسلیم کرتے ہیں: امریکہ

ڈیورنڈ لائن کو مستقل سرحد تسلیم کرتے ہیں: امریکہ

واشنگٹن (ویب ڈیسک) امریکا نے پاکستان اور افغانستان سے کہا ہے کہ وہ سرحدی علاقوں سے دہشت گردوں کے محفوظ ٹھکانے ختم کرنے کیلئے مل کر کام کریں کیونکہ ان محفوظ ٹھکانوں کو دہشت گرد دونوں ہمسایہ ممالک میں معصوم شہریوں کو نشانہ بنانے کیلئے استعمال کرتے ہیں۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان جان کربی نے معمول کی بریفنگ کے دوران کہا کہ سرحدی علاقوں سے دہشت گردوں کے محفوظ ٹھکانے ختم کرنے میں دونوں ممالک کا مشترکہ مفاد ہے اور ہم نے اس پر توجہ مرکوز رکھی ہے۔ ہمیں اس بات کا بھی احساس ہے کہ اس سلسلے میں کی جانے والی کوششیں ہمیشہ آسان نہیں رہی ہیں۔ ہم دونوں حکومتوں سے کہتے آئے ہیں کہ وہ اس سلسلے میں مل کر کام کریں۔

امریکی ترجمان نے اس موقع پر ڈیورنڈ لائن کے حوالے سے سوال کا جواب دینے سے گریز کیا تاہم انہوں نے کہا کہ اس معاملے کے بارے میں جو کچھ پہلے کہا جاچکا ہے، وہ اس میں مزید کچھ اضافہ نہیں کریں گے۔ امریکا ڈیورنڈ لائن کو پاکستان اور افغانستان کے درمیان ایک مستقل سرحد تسلیم کرتا ہے۔

 

Comments are closed.

Scroll To Top